صحت کے وہ مسائل جنہیں آپ پیازصرف اپنے جسم پررکھ کر ہی حل کر سکتے ہیں

کھانے میں پیاز ایک اہم جزو ہے چاہے وہ سلاد ہو سالن ہو یا کوئی بریانی پیاز کا استعمال لازمی کیا جاتا ہے لیکن کیا آپ جانتے ہیں اگر اسے صحت بخش ترین غذاؤں میں سے ایک کہا جائے تو یہ بھی بے جا نہ ہوگا۔ یہ قدرت کی جانب سے عطاءکیا گیا اینٹی بائیوٹک ہے جو کئی طرح کی بیماریوں کے خلاف انسانی جسم میں مدافعت پیدا کرتا ہے۔ اس میں پائی جانے والی سلفر اس کے جراثیم کش اور اینٹی بائیوٹک فوائد کی بنیادی وجہ ہے ۔ کویرے سیٹن جیسے اینٹی آکسیڈنٹ بھی اس میں بکثرت پائے جاتے ہیں۔

یہ سانس کی بیماریوں، ذیابیطس، جوڑوں کے درد، دل کی بیماری اور کولیسٹرول جیسی بیماریوں میں بھی مفید ہے۔ پیاز کا ایک اہم فائدہ اس وقت دیکھا جا سکتا ہے جب بدقسمتی سے آپ کو شہد کی مکھی یا بھڑ کاٹ لے۔ اس کا درد ناقابل برداشت محسوس ہوتا ہے۔ ایسی صورت میں سب سے پہلے تو ڈنک نکالیں اور اس کے بعد متاثرہ جگہ پر پیاز کا ٹکڑا رگڑیں۔ جلد ہی درد اور سوجن دونوں غائب ہوجائیں گی۔ اگر بخار کی شدت ہو تو جرابیں پہن کر ان میں کٹے ہوئے پیاز کے ٹکڑے ڈال لیں۔ بخار کی شدت میں افاقہ محسوس ہوگا۔ انسانی جسم میں بہت سے فاسد مادے پیدا ہوجاتے ہیں جو کئی طرح کی بیماریوں کا سبب بنتے ہیں۔ پیاز کا باقاعدگی سے استعمال جسم کو ان فاسد اور زہریلے مادوں سے قدرتی طور پر پاک کرتا رہتا ہے۔ اگر کانوں میں میل جمع ہونے کی وجہ سے یہ بند محسوس ہونے لگیں تو پیاز کا ایک چھوٹا سا ٹکڑا کاٹ کر اسے کپڑے میں لپیٹ کر سوتے وقت کان کے اندر رکھیں اور صبح اسے نکال لیں۔ یہ کان میں جمی ہوئی میل کو نرم کرکے خارج ہونے میں مدد دے گا۔

اگر آپ کو ہماری پوسٹ پسند آئی تو اپنے دوستوں کے ساتھ شئیر کیجئیے 

Check Also

مجھ سے نکاح کرلو

ہر طرف خاموشی تھی کوئی جواب نہیں تھا اسکی خاموشی چیخ چیخ کر بول رہی …

Leave a Reply

Your email address will not be published.