عید کی نماز پر پابندی عائد کر دی گئی

سری نگر (ویب ڈیسک) ہندو شدت پسند مودی سرکار نے مقبوضہ کشمیر میں عید کی نماز پر پابندی عائد کر دی، کرونا وائرس پھیلاو کے باوجود بھارت میں ہندووں کی مذہبی رسومات پر کوئی خاص پابندیاں عائد نہ کی گئیں، جبکہ مہلک وبا کو بہانہ بنا کر مقبوضہ کشمیر کے مسلمانوں کو عید کی نماز کی ادائیگی سے محروم کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں ہندو شدت پسند مودی سرکار نے اب کھل کر مسلمانوں کیخلاف جارحانہ اقدامات اٹھانا شروع کر دیے ہیں۔بتایا گیا ہے کہ تقریباً ایک سال سے لاک ڈاون کی حالت میں موجود مقبوضہ کشمیر کے مسلمانوں کو اب عید کی نماز کی ادائیگی سے بھی محروم کر دیا گیا ہے۔ نریندر مودی سرکار نے کرونا وائرس وبا کو بہانہ بنا کر مقبوضہ کشمیر کے مسلمانوں کیلئے عید کی نماز کے اجتماعات کے انعقاد پر پابندی عائد کر دی ہے۔ جبکہ خود نریندر مودی کرونا وائرس پھیلاو کے باوجود 5 اگست کو بابر مسجد کی جگہ مندر کی تعمیر کا سنگ بنیاد رکھے گا۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق سینئر تجزیہ کاروں نے کہا ہے کہ عیدالاضحی پر مارکیٹیں بند کرنے سے اربوں روپے کا نقصان ہوگا، پچھلے سال عید پر355 ارب روپے کا بزنس ہوا تھا، حکومت کو مارکیٹیں اور بازار بند کرنی تھیں تو 10روز قبل اعلان کرتے، تاکہ لوگ شاپنگ کرلیتے۔ نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر صحافی عارف حمید بھٹی نے کہا کہ بازاروں میں 50 فیصد دکاندار عیدین پر6 ماہ کا خرچہ نکالتے ہیں، لیکن اب 4دن پہلے دکانیں بند کردی ہیں، ایک طرف کہتے لوگ بھوکے مر جائیں گے، عمران خان صاحب لوگ ان قدامات سے بھوکے مر رہے ہیں، ذرا دیکھیں ان دکانوں میں کتنا سٹاف کام کررہا ہے۔حکومت پاکستان نے کوئی راکٹ سائنس نہیں کی، یہ اللہ کی طرف سے کرم ہوا ہے۔

اس موقع پر سعید قاضی نے کہا کہ حکومت کو چاہیے تھا کہ مارکیٹیں اور بازار بند کرنے کا اعلان 10روز قبل کرتے تاکہ لوگ شاپنگ کرلیتے۔355 ارب کا 2018ء میں عیدالاضحی پر کاروبار ہوا تھا۔ واضح رہے صوبائی وزیر قانون،پارلیمانی امور و سوشل ویلفیئر راجہ بشارت نے کہا ہے کہ پنجاب حکومت نے پیر اور منگل کی درمیانی رات سے پنجاب بھر میں مکمل لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا ہے جوآئندہ بدھ تک جاری رہے گا-لاک ڈاؤن کا مقصدیہ ہے کہ ہم کرونا کو شکست دینے کہ قریب ہیں اور لاپرواہی سے دوبارہ کیسز کی تعداد کہیں بڑھ نہ جائے.۔وہ آج اپنی زیر صدارت وزیر اعلیٰ ہاؤس میں منعقدہ کابینہ کمیٹی برائے انسداد کورونا کے اجلاس سے خطاب کر رہے تھے- صوبائی وزراء ڈاکٹر یاسمین راشد، میاں اسلم اقبال اور فیاض الحسن چوہان، چیف سیکریٹری پنجاب،ایڈیشنل چیف سیکریٹری داخلہ، ایڈیشنل آئی جی، سیکرٹری ٹو سی ایم، ایس ایم بی آر، سیکریٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ، سیکریٹری پرائمری ہیلتھ، سی سی پی او اور متعلقہ محکموں کے سربراہان بھی موجود تھے-

Check Also

سائنسدانوں نے آپ کے سونے کے انداز کے پیچھے چھپا انتہائی حیران کن راز بتادیا

ہر انسان کو سونے کا انداز جدا ہی ہوتا ہے سونے کا انداز میاں بیوی …